تعارف امیر اہلسنت

کے وِصال کے بعد میں نے ایک مرتبہ یہ ایمان افروز خواب دیکھا کہ ’’اباجان علیہ رحمۃ المنان ایک انتہائی نورانی چہرے والے بزرگ کیساتھ تشریف لائے ،میرا ہاتھ پکڑ کر کہنے لگے ،بیٹی! تم ان کو پہچانتی ہو؟ یہ ہمارے مدنی آقامیٹھے میٹھے مصطفی صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم ہیں ، پھر شہنشاہ رسالت صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم نے مجھ پر بہت شفقت کرتے ہوئے فرمایا کہ تم بہت نصیب دار ہو۔

 

 

سنا ہے آپ ہر عاشق کے گھر تشریف لاتے ہیں

میرے گھر میں بھی ہوجائے چراغاں یارسول اللہ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم

 

ننھاسا دل بھرآیا:

        امیراَہلِسنتدامت برکاتہم العالیہ نے ایک مرتبہ کچھ اس طرح سے بتایاکہ’’میرے بچپن کے دنوں میں ایک بار گھر کے برآمدے کی طرف جاتے ہوئے اچانک میرے دل میں یہ خیال آیا کہ ’’سبھی بچے کسی نہ کسی کی طرف باپا، باپا کہہ کربڑھتے ہیں اور اس سے لپٹ جاتے ہیں پھر ان کے باپا انہیں گود میں اٹھا کر پیار کرتے ہیں ، انہیں شیرینی دلاتے ہیں اور کبھی کبھی کھلونے بھی دلاتے ہیں … کاش ! ہمارے گھر میں بھی باپا ہوتے ، میں بھی ان سے لپٹتااوروہ مجھے پیار کرتے ۔‘‘ اس بے تاب آرزو کی وجہ سے میرا ننھاسا دل بھرآیا اورجگر صدمے سے چُور چُور ہوگیااور میں نے بلک بلک کر رونا شروع کردیا۔ میرے رونے کی آواز سن کر میری بڑی ہمشیرہ جلدی سے وہاں آئیں اور اپنے ننھے یتیم بھائی کو گود میں لیکر بہلانے لگیں۔

                  


 

 

Index