تعارف امیر اہلسنت

مفت تعلیم دی جاتی ہے۔تادمِ تحریر پاکستان بھر میں اسلامی بھائیوں اور بہنوں کے الگ الگ تقریباً 100جامعات المدینہ قائم کئے جاچکے ہیں۔بعض جامعات میں شِفاخانے بھی قائم ہیں جہاں بیمار طلبہ اورمدنی عَملہ کامُفت علاج کیا جاتاہے ۔ ضرورتاًداخل بھی کرتے ہیں نیز حسب ضرورت بڑے اسپتالوں کے ذریعے بھی علاج کی ترکیب بنائی جاتی ہے۔ درسِ نظامی سے فارغ التحصیل ہونے والوں کو تخصص فی الفقہ (دوسالہ مفتی کورس ) اورتخصص فی الفنون (دورانیہ 12ماہ)بھی کروایا جاتا ہے جس میں فلسفہ منطق اور عقائد کی منتہی کتب پڑھائی جاتی ہیں۔ اہلسنت کے مدارس کے ملک گیر ادارہ تنظیم المدارس (پاکستان)کی جانب سے لئے جانے والے امتحانات میں برسوں سے تقریباًہرسال ’’دعوت اسلامی ‘‘کے جامعات کے طلبہ اور طالبات پاکستان میں نمایاں کامیابی حاصل کرتے ہیں بلکہ بسا اوقات اول ،دوم اور سوم پوزیشن حاصل کرتے ہیں۔

دارُ ا لاِفتاء :

        آپ دامت برکاتہم العالیہ نے دعوتِ اسلامی کے ذریعے متعدد ’’ دارُ ا لاِفتائ‘‘ قائم کئے جہاں مفتیانِ کرام دامت فیوضہم تحریری وزبانی فتاویٰ اور ٹیلی فون وانٹر نیٹ کے ذریعے مسلمانانِ عالَم کی شرعی رہنمائی فرماتے ہیں۔تقریباً چھ سال کے عرصے میں 50,000سے زائد فتاویٰ کا اجراء ہوچکا ہے ۔دارالافتاء کے انتظام وانصرام کو چلانے کے لئے ’’مجلس افتائ‘‘ قائم کی گئی ہے ۔دیگر علمائے اہلِسنّت دامت فیوضہم سے


 

 

Index