تعارف امیر اہلسنت

بھی درخواست ہے کہ اسے اپنا حق مُعاف کر دیں۔  اگر سرکارِ مدینہ صلَّی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کی شَفاعَت کے صَدقے محشر میں مجھ پر خُصوصی کرم ہوگیا تو ان شاءَاللہعَزَّوَجَلَّ اپنے قاتِل یعنی مجھے شہادت کا جام پلانے والے کوبھی جنّت میں لیتا جاؤں گابشرطیکہ اُس کا خاتِمہ ایمان پر ہُوا ہو۔

(اس سلسلے میں مزید معلومات کیلئے مَدَنی وصیت نامہ مطبوعہ مکتبۃ المدینہ کا مطالعہ فرمائیں۔)

جانوروں پر بھی شفقت

          حضرت سیدنا ابو ہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ حضور نبی کریم، رء وف رحیم صلی اللہ تعالیٰ علیہ والہ وسلم نے ارشاد فرمایا :’’ایک فاحشہ عورت کی صرف اس لئے مغفرت فرما دی گئی کہ اس کا گزر ایک ایسے کتے کے پاس سے ہو ا جو ایک کنوئیں کی منڈیر کے پاس پڑا مارے پیا س کے ہانپ رہا تھا ،قریب تھا کہ وہ پیا س سے مرجاتا ۔ اس عورت نے اپنا موزہ اتا ر کر دوپٹے سے باندھا اور پا نی نکال کر اسے پلایا تو یہی اس کی بخشش کا سبب ہو گیا ۔‘‘

(صحیح البخاری ،کتا ب بد ء الخلق ،باب اذا وقع الذباب فی شراب۔۔ الخ الحدیث ۳۳۲۱، ج ،۲،ص ۴۰۹)

بے تاب چیونٹی:

           امیرِ اَہلسنّت دامت برکاتہم العالیہ انسان تو انسان بِلا وجہ جانوروں بلکہ چیونٹی تک کو بھی تکلیف دینا گوارا نہیں کرتے حالانکہ عوامُ النّاس کی نَظَر میں اس کی کوئی وُقْعَت نہیں۔ ایک مرتبہ آپ دامت برکاتہم العالیہ کی خِدمت میں پیش کئے گئے کَیلوں کے ساتھ


 

 

Index